Categories
صحت

مرگی کا مرض کیا لاعلاج ہے ؟ کیا ساری زندگی اس کی دوا کھانا پڑے گی؟ ڈاکٹرعیسٰی نے بتادیا اس کا علاج

مرگی کا مرض ایک ایسا مرض ہے جس کے بارے میں لوگوں کا کہنا ہے کہ یہ جسے ایک بار ہو جائے اس کے ساتھ زندگی بھر لگا رہتا ہے اس کی دوا زندگی بھر کھانی پڑتی ہے۔ چنانچہ یہ بھی کہہ سکتے ہیں کہ اس مرض میں مبتلا شخص ساری زندگی کے لئے ایک روگ میں مبتلا ہوجاتا ہے۔ اس مرض میں کبھی بھی مریض کو دورہ پڑ سکتا ہے۔ اس کے ہاتھ پاؤں مڑ جاتے ہیں، کہیں بھی جھٹکا کھا کر گر جاتا ہے۔ بعض اوقات اس طرح اچانک گرنے سے مریض زخمی بھی ہو جاتے ہیں۔

ایسے مریضوں کا بہت خیال رکھنا پڑتا ہے۔ کیونکہ کبھی بھی کہیں بھی ان پر یہ دورہ پڑ سکتا ہے۔ کچھ اس مرض کی شدت کا زیادہ شکار ہہوتے ہیں جن کو جلدی جلدی یہ دورے پڑتے ہیں کچھ مریض کسی خاص صورتحال میں اس کا شکار ہوتے ہیں۔ ان مریضوں کا حال یہ ہوتا ہے کہ اکثر لوگ ان کو دیکھ کر شک میں مبتلا ہوجاتے ہیں کہ شاید ان پر کوئی اثرات یا سایہ وغیرہ ہے۔ جبکہ ایسا کچھ نہیں ہوتا ۔ ایسے مریضوں کا باقاعدہ اور مستقل علاج کروانا چاہیے۔ یہاں ہم آپ کے لئے ڈاکٹرعیسٰی کا ایک نسخہ لے کرآئے ہیں جس کو آپ اپنے مریض کو استعمال کروا کر ان کی صحت کو بحال کرنے میں مدد کر سکتے ہیں۔ اس کے لئے چاہیے:

عاقر قرحا 25 گرامعاقر قرحا کے بارے میں ایک بات یہ بھی ہے کہ یہ بہت مہنگی جڑی بوٹی ہے اس لئے اکثر لوگ اپنے پاس جعلی عاقر قرحا رکھ لیتے ہیں، اس کو جانچنے کی پہچان یہ ہے کہ اس کو زبان پر لگاؤ تو زبان ٹھنڈی ہو جاتی ہے۔ تو اسے لینے سے پہلے ضرور جانچ لیں۔عودِ سلیم 25 گراماسرول/ چندن 10 گرامان تمام چیزوں کو پہلے کوٹ لیں، پھرمشین میں ڈال کرپاؤڈربنا لیں۔ اب اس پاؤڈرکو مندرجہ ذیل طریقے سے خوراک دیں۔ 18 سال سے کم عمر بچوں کے لئے دو چٹکی دن میں دو دفعہ18 سال سے زائد عمرکے افراد کے لئے ایک چوتھائی چائے کا چمچ دن میں دو دفعہاس دوا کو کم ازکم 2 سال تک استعمال کریں۔ اور جب یہ دوا شروع کریں تو اس کے ساتھ اپنی ڈاکٹری دوا لیتے رہیں۔ آہستہ آہستہ جب فائدہ ہونا شروع ہو تو پھربتدریج دوا کم کی جائے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔