Categories
صحت

تربوز کے بیج ذیابطیس کا قدرتی علاج ہیں انہیں پھینکیں مت انکے بہت قیمتی فائدے ہیں

تربوز ابتدائی گرمیوں کی ایک ایسی سوغات ہے جو شدید موسم میں جسم کی ڈھال بن جاتی ہے اور قوت مدافعت کو بیماریوں کے خلاف پہلوان بنا دیتی ہے۔ تربوز کھانے کے بیشمار فوائد ہیں کیونکہ گرمی کے موسم میں یہ جسم میں جہاں پانی کی کمی پیدا ہونے سے روکتا ہے وہاں یہ جسم کی گرمی خارج کرکے اس کے درجہ حرارت کو نارمل رکھنے میں مدد دیتا ہے اور اسے فوری توانائی مہیا کرتا ہے۔

ماہرین صحت کے نزدیک تربوز کا گلیسمک انڈیکس ہائی ہے لہذا شوگر کے ایسے مریضوں کے لیے جن کا گلوکوز لیول ہائی رہتا ہے یہ کوئی اتنا اچھا پھل ثابت نہیں ہوتا لیکن طبیب حضرات کے نزدیک اس کے بیج نہ صرف شوگر بلکہ اور بہت سے امراض میں ایک کارگر دوا کی صورت میں کام کرتے ہیں اور اس آرٹیکل میں ہم جانیں گے کہ تربوز کے بیج ہمارے جسم کو کیسے فائدہ پہنچاتے ہیں۔
غذائی صلاحیت
تربوز کے بیج آئرن، میگنیشیم، زنک اور صحت بخش چکنائی کا بہترین ذریعہ ہیں۔ اس کے 4 گرام بیجوں میں تقریبًا 29.0 ملی گرام ایریون، 21 ملی گرام میگنیشیم، پولی ان سیچوریٹڈ اور مونو ان سیچوریٹڈ فیٹی ایسڈ ہوتے ہیں۔ ان کے علاوہ کیلشیم، میگنیشیم، فولیٹ، وٹامن بی 6، تھیامن اور اس جیسے کئی صحت کے لیے ضروری غذائی اجزا کے باعث تربوز کے بیجوں کے فوائد کسی سے ڈھکے چھپے نہیں ہیں۔

موٹاپے کے دشمن
تربوز کے بیجوں کی غذائیت اسے ایک زبردست سپر فوڈ بناتی ہے۔ ان میں موجود کیلوریز زیادہ تر اس میں موجود صحت مند چکنائی کے باعث ہیں اور اسے مناسب مقدار میں کھانا ان لوگوں کے لیے بہت اچھی چیز ہے جو وزن کم کرنا چاہتے ہیں اور موٹاپے کو کنٹرول میں رکھ کر آپ کئی خطرناک بیماریوں سے بچ سکتے ہیں۔
ذیابطیس اور تربوز کے بیج
تربوز کے بیج خون میں شوگر کی سطح کو کم کرنے اور انسولین کے خلاف مزاحمت سےبھرپور خوبیوں کی وجہ سے طبیب حضرات کے نزدیک ذیابیطس کے مریضوں کے لیے انتہائی اہم غذا ہیں ۔ ایک تحقیق کے مطابق تربوز کے بیجوں میں پایا جانے والا میگنیشیم میٹابولائز کاربس کو موثر طریقے سے کنٹرول کرکے ٹائپ ٹو ذیابیطس میں مدد کرتا ہے۔ اگر ذیابطیس کے مریض اپنی خوراک میں توازن کیساتھ تربوز کے بیجوں اور ورزش کو اپنی روزانہ کی روٹین میں شامل کر لیں تو یہ ان کی اس بیماری کو حیرت انگیز طریقے سے ٹھیک کر سکتے ہیں۔
توانا جلد
تربوز کے بیج ہماری جلد کے لیے بھی بہت اچھے ہیں جو کہ میگنیشیم، اینٹی آکسیڈنٹس اور زنک جیسے غذائی اجزاء سے بھرپور ہوتے ہیں۔ یہ نہ صرف آپ کی جلد کے رنگ کو بہتر بناتا ہے بلکہ عمر بڑھنے کے عمل کو بھی سست کرتا ہے۔ تربوز کے بیجوں سے نکالا جانے والا تیل جلد کی دیکھ بھال کرنے والی بہت سی مصنوعات میں بھی استعمال ہوتا ہے اس لیے صدا جوان رہنے کے لیے ان بیجوں کو پھینکنے کی بجائے اپنی خوراک کا حصہ بنائیں۔

انرجی لیول بڑھاتے ہیں
بے پناہ غذائی خوبیوں کے علاوہ تربوز کے بیجوں کی ایک خوبی یہ بھی ہے کہ یہ فوری توانائی بحال کر دیتے ہیں اور گرمی میں نڈھال جسم کو توانا ہونے میں مدد دیتے ہیں لیکن یاد رہے کہ کیلوریز میں زیادہ ہونے کے باعث انہیں کم مقدار میں استعمال کرنا چاہیے۔
ہڈیوں کو مضبوط بناتے ہیں
تربوز کے بیجوں میں کیلشیم کی بڑی مقدار میں موجودگی اسے ہڈیوں کے لیے انتہائی مفید غذا بنا دیتی ہے۔ کیلشیم ہڈیوں کو مضبوط بنانے کے لیے ایک انتہائی اہم منرل ہے جسے ہم دُودھ، دہی، سبز پتوں والی سبزیوں اور ڈرائی فروٹس وغیرہ میں حاصل کر سکتے ہیں لیکن تربوز کے بیج بھی اسے حاصل کرنے کا ایک اچھا ذریعہ ہے۔
بالوں کی صحت شاندار
پروٹین، آئرن، میگنیشیم اور کاپر ایسے غذائی اجزا ہیں جو بالوں کی صحت کے لیے انتہائی ضروری ہیں اور یہ غذائی اجزا تربوز کے بیجوں میں اچھی مقدار میں پائے جاتے ہیں۔ انہیں کھانا اور ان کے تیل کو سر کے بالوں میں استعمال کرنا بالوں کی صحت پر شاندار نتائج پیدا کرتا ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔