Categories
صحت

وزن گھٹانے سے لے کر طاقت بڑھانے تک گنے کے رس کے فوائد کیا ہیں؟ 

ایسے تو گنے کے رس کے فوائد بے شمار ہیں۔اس کے استعمال سے نہ صرف گرمی دور ہوتی ہے بلکہ بہت سے طبی فوائد بھی حاصل ہوتے ہیں۔ماحولیاتی تبدیلیوں کے باعث گرمی کے موسم میں پیاس کی شدت بڑھ جاتی اور پسینہ زیادہ آتا ہے،ایسے میں اگر گنے کا رس پی لیا جائے تو گویا جان میں جان آجاتی ہے۔ گنے کا رس پاکستان کا قومی مشروب ہے۔۔ گنے کا رس انرجی ڈرنکس کا بہترین نعم و بدل ہی نہیں بلکہ ان سے ہزار درجہ اچھا اور فائدہ مند ہے۔ وزن گھٹانے سے لے کر طاقت بڑھانے تک گنے کے رس کے فوائد اور کیا کیا ہیں جانتے ہیں۔

گنے کے رس کے فوائد
گنے کے رس سےآپ کو فوری توانائی ملتی ہے جو آپ کو زیادہ تروتازہ رکھتی ہے۔ صحت کے لیۓ گنے کے رس کے فوائد اتنے زیادہ ہیں کہ ماہرین کی طرف سے گرمیوں میں روزانہ ایک گلاس پینے کا مشورہ دیا جاتا ہے۔ ایک گلاس تازہ گنے کا رس تھوڑا سا کالا نمک کے ساتھ پینے سے آپ تازگی محسوس کریں گے۔ گنے کے رس کے فوائد درج ذیل ہیں۔مزید گنے کے رس کے فوائدجاننے کے لیۓ اور صحت بخش غذائی چارٹ کے
یہ وزن کم کرنے میں مدد کرتا ہے
گنے کے رس کے فوائد میں سے ایک بڑا فائدہ یہ ہے کہ گنے کے رس میں فائبر کی زیادہ مقدار زیادہ دیر تک پیٹ بھرا ہوا رکھ سکتی ہے اور آپ کو اضافی کلو کو کم کرنے میں مدد دیتی ہے۔ کچھ لوگ کہتے ہیں کہ گنے کے رس میں چینی کی مقدار زیادہ ہوتی ہے، لیکن یہ دراصل وزن کم کرنے کے لیے بہترین ہے۔ ایسا اس لیے ہوتا ہے کیونکہ گنے کا رس آپ کی آنتوں کو صاف کرنے میں مدد کرتا ہے، میٹابولزم کو بڑھاتا ہے اور آخر کار وزن میں کمی کا باعث بنتا ہے۔

یہ فوری توانائی فراہم کرتا ہے
گنے کا رس نہ صرف پانی کی کمی کو دور کرے گا، بلکہ گنے کے رس کے فوائد کی اہمیت اس لیۓ بھی بڑھ جاتی ہے کہ یہ ایک حیرت انگیز توانائی بڑھانے والابوسٹر بھی ہے۔ یہ آپ کے جسم کے درجہ حرارت کو بھی کم کرتا ہے کیونکہ اندرونی طورپر اس کا ٹھنڈک کا اثر ہوتا ہے۔ گنے کے رس میں موجود سادہ شکر جسم میں آسانی سے جذب ہو جاتی ہے اور لو شوگر لیول کو کنٹرول کرنے کے لیے استعمال ہوتی ہے۔ صرف ایک گلاس گنے کا رس پینے کے بعد اپنا انرجی لیول چیک کریں۔
ذیابیطس کے مریضوں کے لیے مفید ہے
اس میں قدرتی شکر ہے لیکن گنے کے رس کے فوائد ذیابیطس کے حوالے سے بھی بہت ہیں۔ گنے کا رس شوگرکےمریضوں کے لیے اعتدال میں پینا مفید ہے۔ گنے کا رس ذیابیطس کے مریضوں کو فائدہ پہنچا سکتا ہے، قدرتی شکر میں کم گلیسیمک انڈیکس ہوتا ہے جو خون میں گلوکوز لیول میں بار بار اضافے کو روکتا ہے۔

یہ کینسر کے خلاف تحفظ فراہم کرتا ہے
کیلشیم، میگنیشیم، پوٹاشیم، آئرن اور مینگنیز کی زیادہ مقدار گنے کے رس کو قدرتی الکلائن بناتی ہے اور کینسر سے لڑنے میں مدد دیتی ہے۔ گنے کے رس میں فلیونائڈزکی موجودگی جسم کو کینسر کے خلیات خصوصا پروسٹیٹ اور چھاتی کے کینسر کو روکنے میں مدد دیتی ہے۔ کینسر کا علاج ممکن ہے اس لیۓ فکر مند ہونے کے بجاۓ کینسر کی تشخیص کی صورت میں اعلی تربیت یافتہ ماہرین سے رابطے کے لیے یہاں سے رجوع کریں۔
یہ ہاضمے میں مدد کرتا ہے
ماہرین کا کہنا ہے کہ گنے کا رس جلاب کی خصوصیات سے بھرا ہوا ہے، لہذا اسے پینے سے قبض سے نجات مل سکتی ہے۔ گنے کا رس نظام ہاضمہ کو صحت مند رکھتا ہے اور پیٹ کے انفیکشن سے بچاتا ہے۔ گنے کے رس کے فوائد اس لیۓ بھی ہیں کہ اگر آپ کو قبض نہیں ہے، تب بھی گنے کا رس آپ کے نظام کوٹھیک رکھ سکتا ہے کیونکہ اس میں موجود پوٹاشیم معدے میں پی ایچ لیول کو متوازن رکھتا ہے اور ہاضمے کے رس کے اخراج کو آسان بناتا ہے۔

یہ جگر کے کام کو بہتر بنانے میں مدد کرتا ہے
گنے کے رس کے فوائد میں سے ایک یہ بھی ہے کہ اس کو جگر سے متعلقہ بیماریوں جیسے یرقان کا ایک بہترین قدرتی علاج کہا جاتا ہے۔ چونکہ گنے کا رس فطرت میں الکلائن ہوتا ہے، اس لیے یہ جسم میں الیکٹرولائٹ کے توازن کو برقرار رکھنے اور جگر کے کام کو بہتر بنانے میں مدد کرتا ہے۔
یہ جلد کو صاف رکھتا ہے
گنے کے رس کے فوائدجلد کے حوالے سے یہ ہیں کہ اس کا عام استعمال جلد کے مسائل جیسے ایکنی کو کم کرنے اور ٹھیک کرنے میں مدد کرتا ہے۔ چونکہ گنے کے رس میں گلیکولک ایسڈ کی طرح الفا ہائیڈروکسی ایسڈز ہوتے ہیں، اس لیے یہ سیل ٹرن اوور کو بڑھاتا ہے۔ جلد کو ایکسفولیئٹ بھی کرتا ہے، جس سے ایکنی کے بڑھنے کے امکانات ختم ہوتے ہیں۔ گنے کے رس کو ملتانی مٹی کے ساتھ ایک ماسک بنا کر چہرے اور گردن پر لگائیں۔ اسے بیس منٹ تک لگا رہنے دیں اور ٹھنڈے پانی سے دھو لیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔