Categories
صحت

گُڑ یا شہد میں سے کیا صحت مند ہے؟

چینی کے بارے میں بہت کچھ کہا گیا ہے کہ چینی آپ کی صحت کے لیے اچھی نہیں ہے، یہ میٹھی کھانے کی چیز آپ کے جسم پر واقعی نقصان دہ اثرات مرتب کر سکتی ہے۔ موٹاپے، دل کی بیماری یا ذیابیطس کے خطرات سے، یہ خیال کیا جاتا ہے کہ چینی آپ کے دانتوں، اور مدافعتی نظام کو متاثر کرتی ہے اور بڑھاپے کو بھی تیز کرتی ہے۔

چینی آپ کی جِلد کے لیے بھی اچھی نہیں ہے اور، پھر کچھ لوگ محسوس کرتے ہیں کہ وہ چینی کے لیے کچھ متبادل استعمال کر سکتے ہیں جیسے گڑ یا شہد۔ تاہم، اس بارے میں ایک عام الجھن پیدا ہوئی ہے کہ شہد صحت بخش ہے یا گُڑ۔ اس حوالے سے ماہرین غذائیت کا کہنا ہے کہ کوئی بھی شوگر چینی ہوتی ہے، چاہے وہ شہد ہو، گڑ، گنے کی شکر، کھجور کی شکر، تمام چینی پروٹین کے مالیکیولز کے ساتھ منسلک ہو جائیں گی اور ان کے نتیجے میں پیشگی گلائیکیشن ختم ہونے والی مصنوعات پیدا ہوں گی، یہ زہریلے فری ریڈیکلز ہیں جو کہ جلد کو نقصان پہنچائیں گے۔ اُنہوں نے مزید کہا کہ اس کے علاوہ چینیIGF1 کی سطح کو بڑھا سکتی ہے جو مہاسوں کا سبب بن سکتی ہے لہٰذا شہد یا گُڑ ایک جیسا ہے۔ ماہرین اکثر مشورہ دیتے ہیں کہ اگر ہم جوان جِلد حاصل کرنا چاہتے ہیں تو ہمیں چینی کے استعمال سے پرہیز کرنا چاہیے اور جو لوگ بڑھتی عُمر کو چھپانا چاہتے ہیں، انہیں چینی سے دور رہنا چاہیے، بشمول گنے کی شکر، نارمل چینی، گڑ۔ بنیادی طور پر، ہر قسم کی چینی سے پرہیز کریں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔