Categories
sehat

شہد اور سونف ملا کر کھانا بیشمار بیماریوں میں شفا ہے

سونف اور شہد دونوں ہی صحت کے لیے فائدہ مند ہیں۔ ان دونوں کے استعمال سے کئی قسم کی بیماریاں آپ سے دور رہتی ہیں اور جب ان دونوں کو ایک ساتھ استعمال کیا جاتا ہے تو ان کی افادیت میں اضافہ ہوتا ہے اور یہ جسم کو کئی طریقوں فائدہ پہنچاتے ہیں۔ اس آرٹیکل میں سونف اور شہد کو ملا کر استعمال کرنے کے فائدے ذکر کیے جائیں گے تاکہ آپ بھی ان دونوں کے استعمال سے صحت کو بہتر بنا سکیں۔

نزلہ ، زکام، کھانسی اور بخار
نزلہ و زکام وغیرہ گرمی اور سردی دونوں موسموں میں انسان کو متاثر کرتے ہیں اور ان کے پیدا ہونے کی کئی وجوہات ہو سکتی ہیں جن میں بڑی وجہ فضائی آلودگی اور موسم کی شدت ہے جس سے ایمیون سسٹم کمزور ہو جاتا ہے لیکن ایسے موقع پر اگر آپ گھر میں سونف کے پاوڈر کو شہد میں ملا کر روزانہ استعمال کریں تو یہ بیماریاں آپ کے قریب بھی نہیں آئیں گی۔
نظام انہظام
ہماری قوت مدافعت کا 80 فیصد تعلق ہمارے نظام انہظام سے ہے اور اگر یہ نظام ٹھیک کام کر رہا ہو تو صحت متاثر نہیں ہوتی اور انسان کو کھائی جانے والی غذا سے توانائی ملتی رہتی ہے لیکن اس نظام کی خرابی سارے جسم کی صحت کو برباد کرنے کے لیے کافی ہے۔ سونف میں قدرت نے ایسی خویباں رکھی ہیں جو اسے نظام انہظام کے لیے انتہائی مفید بنا دیتی ہیں اور اگر سونف کو شہد کے ساتھ استعمال کیا جائے تو یہ بد ہضمی، قبض، گیس، معدے میں تیزابیت، پیٹ کا پھولنا، اور بھوک کی کمی وغیرہ جیسے مسائل کا خاتمہ کر دیتی ہے۔

جلد توانا ہوتی ہے
بہت کم لوگ جانتے ہوں گے کہ سونف اور شہد کا مرکب جلد کے لیے بھی بہت فائدہ مند ہوتا ہے۔ دونوں کا ایک ساتھ استعمال آپ کی جلد کو چمکدار، بے داغ اور خوبصورت بنائے گا۔
ایمیون سسٹم
شہد ایک سُپر فوڈ ہے اور اس میں اینٹی آکسائیڈینٹ، اینٹی بیکٹریل خوبیاں اسے ہماری قوت مدافعت کے لیے انتہائی مفید بنا دیتی ہیں اور شہد میں سونف کے استعمال سے جہاں پیٹ کی جملہ بیماریاں ختم ہوتی ہیں وہاں قوت مدافعت اتنی مضبوط ہو جاتی ہے کہ عام وائرل بیماریاں جسم کو نقصان پہنچانے میں ناکام ہو جاتی ہیں۔
سوزش
جسم کے اندرونی اعضا کی سوزش گو کے دیکھائی نہیں دیتی لیکن یہ جسم کو اندر ہی اندر سے کھوکھلا کر دیتی ہے اور اندرونی اعضا کی کارکردگی کو متاثر کرتی ہے اور بہت سی دائمی بیماریوں جن میں ذیابطیس، بلڈ پریشر اور دل کی بیماریاں شامل ہیں کو دعوت دیتی ہے۔ سوزش اگر جوڑوں میں ہو جائے تو انتہائی تکلیف دہ بیماری بن جاتی ہے اور انسان کو معذور بنا دیتی ہے۔ شہد اور سونف کا باقاعدہ استعمال جسم سے سوزش کا خاتمہ کرتا ہے کیونکہ ان دونوں میں اینٹی انفلامیٹری خوبیاں شامل ہیں جو سوزش کو ختم کرتی ہیں۔

میٹابولیزم تیز ہوتا ہے
میٹابولیزم جسم میں 3 اہم کام سرانجام دیتا ہے۔ یہ خوراک سے توانائی کو جسم میں جذب کرنے میں مدد دیتا ہے، یہ خوراک میں موجود پروٹین، لیپڈز، اور نیوکلیک ایسڈز کو بلڈینگ بلاک میں تبدیل کرتا ہے اور میٹابولک ویسٹ کو ختم کرتا ہے۔ ہمارے جسم کا میٹابولیزم جتنا اچھا کام کر رہا ہو گا ہماری صحت اتنی ہی بہتر ہو گی اور جب یہ سست ہو جائے تو موٹاپا اور دیگر بیماریاں جسم پر حملہ آور ہوتی ہیں اور صحت کو برباد کر دیتی ہیں۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ شہد اور سونف کو ملا کر استعمال کرنے سے جسم کا میٹابولیزم تیز ہوتا ہے اور موٹاپا پیدا نہیں ہوتا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔