Categories
Uncategorized

لاہور قلندرز کا قذافی سٹیڈیم کی جگہ 80 ہزار گنجائش والے کرکٹ گراؤنڈ کا مطالبہ

لاہور قلندرز نے لاہور میں بڑے سٹیڈیم کا مطالبہ کیا ہے کیونکہ قذافی سٹیڈیم کی گنجائش کرکٹ شائقین کی بڑھتی ہوئی تعداد کو تفریح ​​​​فراہم کرنے کے لیے کافی نہیں ہے۔ فرنچائز لاہور کے شائقین کو شہر میں ایک نیا کرکٹ سٹیڈیم فراہم کرنا چاہتی ہے۔ 

لاہور قلندرز کے سی ای او عاطف رانا نے پی ایس ایل 7 کے لاہور لیگ میں بھرے سٹیڈیم دیکھے جانے کے بعد سے زیادہ گنجائش والے میدان کی ضرورت پر اظہار خیال کیا اور کہا کہ بہت سے شائقین کو اپنے پسندیدہ میچوں کے ٹکٹ نہیں ملے۔

شائقین کے جوش و خروش کو دیکھ کر عاطف رانا نے پہلے سے موجود سٹیڈیم کی جگہ نیا سٹیڈیم بنانے کی مطالبہ کیا ۔ لاہور قلندرز کے سی ای او کا کہنا تھا کہ قذافی سٹیڈیم پی ایس ایل 7 کے لیے اتنا بڑا نہیں تھا، فائنل میچ میں تقریباً اتنی ہی تعداد میں تماشائی جو سٹیڈیم کے اندر موجود تھے باہر بھی موجود تھے۔

شائقین کے جذبے اور دلچسپی کو دیکھتے ہوئے نئے اور بڑے سٹیڈیم کا ہونا ضروری ہے۔

عاطف رانا نے قذافی سٹیڈیم لاہور کو ہائی پروفائل میچز کی میزبانی کے لیے ناکافی قرار دیتے ہوئے کہا کہ لاہور قلندرز اس معاملے پر کام کر رہی ہے اور آنے والے دنوں میں مزید پیش رفت دیکھنے کو ملے گی۔ لاہور 2 کروڑ کی آبادی کا شہر ہے اور 27 ہزار افراد کی گنجائش والا سٹیڈیم اس شہر کے ساتھ انصاف نہیں کرتا۔ عاطف رانا نے امید ظاہر کی کہ وہ لاہور کے کرکٹ شائقین کو تقریباً 80,000 شائقین کی گنجائش والا نیا سٹیڈیم فراہم کریں گے۔

انہوں نے یہ بھی دعویٰ کیا کہ ملک بھر سے لوگ لاہور قلندرز کو سپورٹ کرتے ہیں، اس لیے ہوم گراؤنڈ میں زبردست ہجوم کو محظوظ کرنے کی صلاحیت ہونی چاہیے۔ لاہور قلندرز کو زبردست پذیرائی ملی کیونکہ ہوم ٹیم نے 27 فروری کو قذافی سٹیڈیم میں پاکستان سپر لیگ کی اپنی پہلی ٹرافی اٹھائی۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔