Categories
Uncategorized

دنیا بھر میں پی ایس ایل دیکھا جارہا ہے اور ایسے میں اس قسم کی حرکت۔۔ حارث رؤف کے کامران غلام کو ‘تھپڑ’ مارنے پر شاہد آفریدی نے کیا کہا؟

قومی کرکٹ ٹیم کے سابق مایہ ناز آل راؤنڈر شاہد آفریدی نے پشاور زلمی اور لاہور قلندرز کے مابین میچ میں حارث رؤف کے کامران غلام کو تھپڑ مارنے کے معاملے پر تبصرہ کیا ہے۔

شاہد آفریدی کا کہنا ہے کہ اُن کی حارث سے جب بھی ملاقات ہوئی وہ بہترین رہی، حارث سادہ سے بندہ ہے اور اس کی بولنگ سے اندازہ ہوجاتا ہے کہ وہ کتنا جارح مزاج ہے۔

انہوں نے حارث کے کامران غلام کو تھپڑ مارنے کے معاملے پر کہا کہ حارث نے کوئی اچھی حرکت نہیں کی ہے، اس طرح کی حرکت ٹی وی پر نہیں ہونی چاہیے، دنیا بھر میں پی ایس ایل دیکھا جارہا ہے اور ایسے میں اس قسم کی حرکت ریکارڈ پر آجاتی ہے۔

شاہد آفریدی نے کہا کہ کچھ چیزیں اگر ہو جاتی ہیں تو ان سے سبق سیکھنا چاہیے اور آئندہ احتیاط سے کام لینا چاہیے۔

سابق مایہ ناز کرکٹر کا کہنا تھا کہ فاسٹ بولر کے جارحانہ رویے کے مسائل گُرومنگ اکیڈمی میں حل ہونے چاہییں۔

شاہد آفریدی نے یہ بھی کہا کہ حارث رؤف کو آئندہ بہت احتیاط کرنی پڑے گی کیونکہ مستقبل میں اُس کا ایسا رویہ کوئی برداشت نہیں کرے گا۔

انہوں نے یہ بھی کہا حارث کی اس حرکت پر ٹیم مینجمنٹ کو ایکشن لینا چاہیے تھا لیکن مینجمنٹ کی جانب سے حارث کا دفاع کرنا غلط ہے۔

پیر کے روز میچ کے دوران حارث رؤف اور کامران غلام میں گرما گرمی دیکھنے کو ملی تھی، لاہور قلندرز کے فاسٹ بولر حارث رؤف پشاور زلمی کے محمد حارث کو آؤٹ کرنے کے بعد خوشی کے لمحات میں بھی حضرت اللہ زازئی کا کیچ چھوڑنے والے کامران غلام پر غصہ نکالنا نہ بھولے اور تھپڑ رسید کر دیا۔

کامران غلام ، حارث رؤف سے تھپڑ کھا کر ہنستے رہے، جبکہ حارث رؤف انہیں غصے سے گھورتے رہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔