Categories
Uncategorized

پاکستان سپر لیگ کی تاریخ میں کتنے رن بنائے گے اور سب سے زیادہ کس ٹیم نے بنائے!

پاکستان سپر لیگ بالکل قریب ہے۔ ٹورنامنٹ کا ساتواں ایڈیشن لاہور اور کراچی میں کھیلا جائے گا۔ کراچی کا نیشنل اسٹیڈیم 27 جنوری سے شروع ہونے والے ٹورنامنٹ کی میزبانی کرے گا۔ جبکہ لاہور آخری مرحلے کی میزبانی کرے گا جس میں پلے آف سٹیج اور فائنل بھی شامل ہے۔ فائنل بھی قذافی سٹیڈیم لاہور میں ہوگا۔

پی سی بی کے مطابق، شائقین اور کھلاڑی پاکستان سپر لیگ کے سات سیزن سے سخت معیاری آپریٹنگ طریقہ کار پر عمل کریں گے جس کی وجہ کوویڈ 19 اور وائرس کے اومیکرون ویریئنٹ کے بڑھتے ہوئے کیسز ہیں۔ ذرائع کے مطابق پاکستان سپر لیگ کو کامیاب بنانے اور لیگ کی قسمت کو خطرے میں نہ ڈالنے کے لیے بلبلہ اس بار زیادہ سخت ہوں گے۔

پاکستان کرکٹ بورڈ بھی ٹورنامنٹ کے ساتویں ایڈیشن کو کامیاب بنانے کے لیے کافی پراعتماد ہے۔ جیسا کہ ہم ٹورنامنٹ کے قریب آتے ہیں ہمارے پاس تیاریوں سے لے کر اعدادوشمار تک اور کون سی ٹیم سب سے زیادہ مضبوط نظر آتی ہے، ہمارے پاس بہت سی چیزیں منتظر ہیں۔ آج ہم اعدادوشمار کے بارے میں بات کریں گے! آئیے دیکھتے ہیں پاکستان سپر لیگ میں سب سے زیادہ رنز کس نے بنائے۔

پاکستان سپر لیگ میں مجموعی طور پر 55,008 رنز بنائے ہیں جن میں پشاور زلمی نے سب سے زیادہ رنز بنائے ہیں۔ ہم نے دیکھا ہے کہ پاکستان سپر لیگ ہمیشہ وکٹوں کے بارے میں زیادہ رہی ہے رنز کی نہیں۔ پھر بھی پشاور زلمی نے سب سے زیادہ رنز بنائے ہیں جو اپنے ایکسپریس بولرز کے لیے مشہور ہیں۔ پشاور زلمی پاکستانی سپر لیگ کے تمام سات سیزن کھیل چکی ہے اور ان کے مالک جاوید آفریدی ہیں۔ ان کے پاس دس ہزار آٹھ سو ستاون رنز (10,857) کے بعد۔

دوسرے نمبر پر ہمارے پاس ایک متوقع ٹیم ہے ہاں! آپ نے صحیح اندازہ لگایا ہوگا۔ اسلام آباد یونائیٹڈ پاکستان سپر لیگ کے 7 ایڈیشنز میں سب سے زیادہ رنز بنانے میں دوسرے نمبر پر ہے۔ اسلام آباد یونائیٹڈ کی کپتانی ان دنوں شاداب خان کر رہے ہیں۔ وہ پاکستان سپر لیگ کے 2 ایڈیشن جیت چکے ہیں۔ وہ پہلی پی ایس ایل جیتنے والی ٹیم بھی تھیں۔ اسلام آباد کے مالک علی نقوی ہیں، انہوں نے مجموعی طور پر نو ہزار نو سو اکیاسی رنز بنائے ہیں۔ (9,981)

تیسرے نمبر پر اسلام آباد یونائیٹڈ کے بعد کراچی کنگز ہے۔ انہوں نے 2020 میں لاہور قلندرز کے خلاف سب سے زیادہ دیکھے جانے والے پاکستان سپر لیگ کا فائنل جیتا تھا۔ ان کی کپتانی عماد وسیم نے کی تھی لیکن اب بابر اعظم وہاں کپتان ہیں اور عماد کو کپتانی سے ہٹا دیا گیا ہے۔ اس بار 2022 میں پہلا موقع ہوگا جب بابر اعظم پورے سال پی ایس ایل میں کسی فرنچائز کی کپتانی کریں گے۔ کراچی کنگ کے مالک سلمان اقبال ہیں جو کہ آرائی گروپ کے مالک اور سی ای او بھی ہیں۔ کراچی کنگز نے پاکستان سپر لیگ کے تمام 7 ایڈیشنز میں مجموعی طور پر نو ہزار چھ سو چھ رنز بنائے ہیں۔

چوتھے نمبر پر ہم پاکستان سپر لیگ کا ایک کامیاب ترین حصہ دیکھتے ہیں۔ جی ہاں ہم بات کر رہے ہیں کوئٹہ گلیڈی ایٹرز کی۔ وہ پاکستان سپر لیگ میں شاندار رہے ہیں۔ پچھلے 5 سیزن سے ایسا لگتا ہے کہ وہ ممکنہ طور پر نہیں کھیل رہے ہیں۔ انہوں نے پی ایس ایل کے تمام 7 ایڈیشنز میں نو ہزار دو سو چودہ رنز (9.214) بنائے ہیں۔ کوئٹہ کا انتظام معین خان کے پاس ہے اور ان کے مالک ندیم عمر ہیں۔ سرفراز سب سے زیادہ وقت ان کے کپتان رہے ہیں۔

نمبر 5 پر ہماری متوقع ٹیم ہے، ہاں ہم لاہور قلندرز کی بات کر رہے ہیں۔ لاہور وہ ٹیم ہے جو پاکستان سپر لیگ میں ہر سال زندہ رہتی ہے۔ پی ایس ایل قلندرز کے بغیر نامکمل ہے۔ لاہور نے ملتان سے زیادہ رنز بنائے ہیں کیونکہ وہ ان سے زیادہ سیزن کھیل چکے ہیں، انہوں نے مزید 2 سیزن کھیلے ہیں پھر ملتان سلطانز نے ابھی تک صرف 2400 مزید رنز بنائے ہیں۔ لاہور نے پی ایس ایل میں سب سے کم اوسط سے رنز بنائے ہیں اور اس کے 8,861 رنز ہیں۔ انہوں نے ٹورنامنٹ کا صرف ایک فائنل کھیلا ہے۔

آخر کار ہمارے پاس دفاعی چیمپئن ملتان سلطانز ہیں۔ محمد رضوان نے گزشتہ سال سلطانز کو پی ایس ایل ٹرافی دلائی تھی اور وہ اس سال ٹرافی کا دفاع کرنے کے لیے تیار ہوں گے۔ انہوں نے ٹورنامنٹ کے پانچ سیزن کھیلے ہیں اور 6,489 رنز بنائے ہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے